عالمی خبریں

محمد خالد اعظمي

قارئین قرآن کی دلچسپی میں اضافہ

نیویارک: اخبارکرسچن سائنس مانیٹر کے مطابق اسلام کے خلاف ویڈیومنظر عام پر آنے کے بعد امریکہ میں قارئین قرآن کی دلچسپی میں ڈرامائی اضافہ ہواہے۔اس وقت بائیبل لٹریچر سوسائٹی کی طرح قرآنی مطالعات کے لیے کوئی خود مختارادارہ تو موجود نہیں لیکن اخبار کہتاہے کہ یہ صورت حال عنقریب بدلنے والی ہے۔ایک سروے کے مطابق پوری دنیا میں قرآن غیرمعمولی تعداد میں چھپ رہاہے۔ صرف سعودی عرب کے سرکاری پریس سے سالانہ قرآن کے ایک کروڑ نسخے چھپتے ہیں۔اسلامی دنیا میں قرآن کے مطالعہ میں ڈرامائی طور پر اضافہ ہواہے۔ امریکہ میں حالیہ برسوں میں قرآن کے انگریزی میں 21نئے ترجمے چھپ کر منظر عام پر آچکے ہیں ۔

توہین آمیزفلم کا ڈائرکٹرروپوش
کیلیفورنیا:امریکہ میں نائن الیون کی 11ویں برسی کے موقع پر اسلام اوررسول پاک اکی مبینہ اہانت پر مبنی ریلیز کی جانے والی فلم کی عالم اسلام میں شدید مذمت کی جارہی ہے ۔ اس اشتعال انگیزفلم Innocence of Muslims کابنانے والا 55سالہ اسرائیلی یہودی ڈائرکٹرسیم باسل ہے جوکیلیفورنیا میں پراپرٹی بلڈرہے ، باسل نے فلم خود لکھی اور خود ہی اسکی ہدایت کاری کی ہے۔اس نے فلم کی تیاری لیے سویہودیوں سے پانچ ملین ڈالرس کا عطیہ وصول کیاہے،جب اس سے عطیہ دینے والوں کی معلومات حاصل کی جانے کی کوشش کی گئی تو اس نے شناخت بتانے سے انکارکیا ۔
متنازعہ فلم جولائی سے آن لائن دکھائی جارہی ہے لیکن جب اسے عربی زبان میں پیش کیاگیاتومسلم ممالک میں احتجاج شروع ہوگیا، اندازہ کیاجاسکتاہے کہ مسلم امت میں آج بھی غیرت ایمانی باقی ہے ، مسلمان دین اسلام پر کسی طرح کا حملہ برداشت نہیں کرسکتاچاہے اس کی جان ہی کیوں نہ چلی جائے۔

صومالیہ کے نئے صدرمنتخب
موگادیشیو : صومالیہ کا شمار افریقہ کے غریب ترین مسلم ممالک میں ہوتاہے۔اورخانہ جنگی کی وجہ سے ملک تباہ وبرباد ہوچکاہے۔
10ستمبرکو موگادیشیو میں ارکان پارلیمان نے حسن شیخ محمود کو ملک کو آٹھواں نیاصدرمنتخب کیاہے۔حسن شیخ کی پیدائش 1955ءمیں ہوئی ، بچپن میں ہی والد کا انتقال ہوگیا، حالات ناگفتہ بہ تھے ، قریبی اعزہ واقرباءکی مدد سے زندگی کے ایام گزارے ، 1981میں صومالی نیشنل یونیورسٹی سے گریجویشن کیااور اعلی تعلیم کے لیے ہندوستان گئے اوربھوپال یونیورسٹی سے 1994ءمیں ماسٹرکی ڈگری حاصل کی۔صدر منتخب ہونے سے پہلے شیخ حسن ڈاکٹرعبد الرحمن السمیط صدر جمعیة العون المباشرکے قائم کردہ تعلیمی ادارہ میں مدیر تھے ۔

دس لاکھ یتیموں کا نگہبان کون ؟
بغداد : عراق کی خانہ جنگی میں ایک اندازے کے مطابق دس لاکھ بچے یتیم ہوچکے ہیں، الجزیرہ چینل نے ایک دستاویزی فلم نشرکی ہے جس سے عراق میںیتیم ہونے والے بچوں کے حال زار کی عکاسی کااندازہ لگایاجاسکتاہے۔الجزیرہ نے عراقی بچوں پر ہونے والے اس ستم کی عکاسی بہت خوبصورت انداز میں پیش کرکے ساری دنیا کو یہ بتانے کی کوشش کی ہے کہ عراقی بچے آج کس دور سے گزر رہے ہیں، اور ان کا پرسان حال کون ؟۔

خواتین کی خدمات ناقابل فراموش
نئی دہلی: اسلامی تاریخ کے ابتدائی دور سے لے کر آٹھویں صدی ہجری تک خواتین کو کس قدر احترام ووقارحاصل تھا۔اس زمانے میں خواتین تعلیم اوردرس وتدریس کے شعبوں میں مردوں کے ساتھ برابرکی شریک تھیں اوراسلامی علوم کے فروغ میں ان کا حصہ مردوں سے کسی بھی طرح کم نہیں تھا۔اس دوران محدثات کی تعداد تقریباً آٹھ ہزار پانچ سو سے زیادہ ہے جنہوںنے علم حدیث میں عظیم خدمات انجام دی ہیں۔ان خیالات کا اظہار آکسفورڈیونیورسٹی لندن کے سینٹرفار اسلامک اسٹڈیز سے وابستہ ڈاکٹرمحمد اکرم ندوی نے ذاکرحسین انسٹی ٹیوٹ آف اسلامک اسٹڈیز ، جامعہ ملیہ اسلامیہ ،نئی دہلی ، انڈیا کے زیراہتمام توسیعی خطبے میں کہا ۔ انہوں نے 53جلدوں پر مشتمل عربی زبان میں ان محدثات کاتذکرہ مرتب کرکے تحقیق کااعلی معیار قائم کیا ہے۔انہوں نے مزید کہاکہ بہت سی حدیثیں صرف خواتین کی وجہ سے باقی ہیں اور اسلام کے تقریباً چوتھائی فقہی احکام خواتین کی علمی تحقیق کے مرہون منت ہیں۔

دنیاکی تین بااثرعرب خواتین
نیویارک: امریکا سے شائع ہونے والا کثیرالاشاعت فوربس میگزین نے سال 2012ءمیں دنیا کی سب سے بااثر ایک سوخواتین کی فہرست جاری کی ہے جس میں تین عرب خواتین کا نام بھی شامل ہے۔اوروہ خواتین نیشنل بینک کویت کی چیف ایگزیکٹیو آفیسر شیخہ خالد البحرہیں جن کا 85واں مقام آیاہے جبکہ متحدہ عرب امارات کی 2008ءمیں بیرونی تجارت کی وزیرہ رہ چکی شیخہ لبنی القاسمی کا92 واںمقام حاصل ہواہے ، اورقطر میوزیم اتھارٹی کی سربراہ شیخہ میسا بنت حمد آل ثانی کا 100 واں مقام میں نام شامل ہے۔ اور اس فہرست میں جرمن چانسلر اینجلا مرکل کانام پہلے نمبر پر ہے۔

زمین سے فضاتک خواتین باحجاب
قاہرہ : مصر میںپہلی مرتبہ ملازمت پیشہ خواتین کودوران ڈیوٹی حجاب اوڑھنے کی اجازت دی گئی ہے ، کچھ دنوں قبل مصری ٹیلی ویژن چینل کی خواتین نیوز اینکرز کی جانب سے حجاب پہننے کے اعلانات کے بعد قومی فضائی کمپنی سے وابستہ کئی ایئرہوسٹس نے بھی ڈیوٹی کے دوران حجاب پہننے کے لیے درخواست دی ہیں۔ اب حکومت نے حجاب کی خواہش مند لڑکیوں کوان کی مرضی کا حجاب اوڑھنے کی اجازت دے دی ہے،لہذا اب کوئی بھی ایئرہوسٹس ڈیوٹی کے دوران حجاب پہن سکتی ہے۔مصر میں 1960ءکے اوائل میں ٹیلی ویژن چینل کا آغاز ہوااور ایسا پہلی مرتبہ ہواہے کہ حجاب کے ساتھ خبریں نشر کرنے کا اہتمام کیا گیا۔

جبرئیل عليه السلام کی فرضی تصویر
نئی دہلی:ہندوستان کے معروف اشاعتی ادارہ NCERT کے زیر اہتمام گیارہویں جماعت کی تاریخ کی کتاب میں جلیل القدر فرشتہ جبرئیل ںکی فرضی تصویر شائع ہوئی ہے، جس میں نعوذ باللہ انہیں بانسری بجاتے ہوئے دکھایاگیاہے۔جہاں دنیاکے دیگرممالک میں اسلام کی شبیہ بگاڑنے کی کوشش جاری ہے وہیں ہندوستان بھی اس میدان میں پیچھے رہنا نہیں چاہتا، لیکن ہندوستانی مسلم قائدین نے اس کی پرزورمخالفت کی ہے۔

سیکڑوں افراد کا قبول اسلام
دبئی: دار البرسوسائٹی دبئی کے مطابق رمضان المبارک میں تین سوسے زیادہ تارکین وطن مشرف بہ اسلام ہوئے ۔ دارالبر کے انفارمیشن کے مطابق اس سال اسلام قبول کرنے والوں کی مجموعی تعداد پندرہ سوسے زیادہ ہوگئی ہے ۔ جبکہ سعودی عرب کے دار الحکومت ریاض میں1993ءکے دوران اسلامک ایجوکیشن فاونڈیشن کے قیام بعد سے پچھلے بیس سالوں میں 20 ہزار سے زیادہ بیرون ملک سے آئے ہوئے افراد نے اسلام قبول کیاہے۔
جبکہ کویت کی لجنة التعریف بالاسلام کے داعیوں کی کوشش سے ماہ رمضان میں 1214 افراد نے اسلام قبول کیا۔جن کا تعلق فلبین، ہندوستان، سریلانکا، اورنیپال وغیرہ سے ہے۔

Be the first to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.


*